News ٰآس پاسٰ برصغیر تازہ ترین

موجودہ صورتحال میں کسی پارٹی سےاتحاد نہیں کرسکتے:میر

کانگریس صدر غلام احمد میر نے ریاست میں موجودہ حالات میں کسی سیاسی جماعت سے اتحاد کے امکان کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ سابقہ بی جے پی – پی ڈی پی مخلوط حکومت نے ریاست کو زخمی کرکے رکھ دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسمبلی کو معطل رکھنے سے ہارس ٹریڈنگ کی راہیں کھل جاتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی کسی بھی صورت میں ہارس ٹریڈنگ کی مرتکب نہیں ہوگی۔ ریاستی کانگریس پارٹی صدر نے ان باتوں کا اظہار منگل کو یہاں منعقدہ کانگریس پارٹی کے اجلاس کے باہر پر نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کیا۔ پارٹی کے اس اجلاس میں سینئر لیڈران غلام نبی آزاد اور امبیکا سونی نے شرکت کی۔

غلام احمد میرنے کہا ’جیسا کہ آپ جانتے ہیں کہ ریاستی کانگریس کا ایک اہم اجلاس آج صبح 11 بجے سے جاری ہے۔ ریاستی کانگریس کے سبھی ممبران اسمبلی، ممبران کونسل، سابق وزراء، سابق ممبران اسمبلی و کونسل اور پوری ریاست سے تعلق رکھنے والے پارٹی عہدیداران اس اجلاس میں موجود ہیں۔
مرکزی قیادت سے ہمارے بیچ میں غلام نبی آزاد، امبیکا سونی اور سابق پی سی سی صدر پروفیسر سیف الدین سوز ہیں‘۔ انہوں نے کہا ’یہ اجلاس ریاست میں پیدا ہونے والی سیاسی اتھل پتھل پر بحث کے لئے بلایا گیا ہے۔ جو مخلوط حکومت تین برس قبل یہاں بنی ہوئی تھی، اس کو ہم نے ہمیشہ ایک غیرمقدس الائنس (اتحاد) قرار دیا تھا۔ یہ سرکار ٹوٹنے کے لئے ہی بنی تھی۔ ان کو صرف ٹوٹنے کے لمحات کا انتظار تھا۔
انہوں نے ریاست کو گورنر راج کی طرف دھکیل دیا۔ اس کی ذمہ داری بی جے پی اور پی ڈی پی پر عائد ہوتی ہے۔ اس کے لئے نہ تو جموں وکشمیر کی عوام اور نہ کانگریس پارٹی ذمہ دار ہے‘۔ انہوں نے کہا ’کانگریس پارٹی کا ماننا ہے کہ گزشتہ ڈھائی برس کے دوران جموں وکشمیر کی زمینی صورتحال انتہائی ابتر رہی۔ ایسے میں ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ پہلے زمینی سطح پر حالات بہتر ہوں۔ لوگوں کا جمہوریت اور جمہوری عمل پر اعتماد پیدا ہو‘۔
غلام میر نے کہا کہ پارٹی کا کہنا ہے کہ یہاں ایک لمبےعرصے تک گورنر راج نافذ نہیں رہنا چاہئے۔ اُن کا کہنا تھا ’ہم نے گورنر صاحب کو کل جماعتی میٹنگ میں بتایا تھا کہ آپ کی ذمہ داری بنتی ہے کہ زمینی صورتحال بہتر ہو۔ اس کے بعد جب آپ موزوں سمجھیں تو یہاں الیکشن کرائے جائیں۔ گورنر راج ایک لمبے عرصے تک نافذ نہیں رہنا چاہیے۔ پارٹی کا آئندہ کا لائحہ عمل کیا ہوگا، آپ کو اس سے واقف کرایا جائے گا‘۔ غلام احمد میر نے کہا کہ اسمبلی کو معطل رکھنے سے ہارس ٹریڈنگ کی راہیں کھل جاتی ہیں

2,297 total views, 0 views today

4 Replies to “موجودہ صورتحال میں کسی پارٹی سےاتحاد نہیں کرسکتے:میر

  1. Very interesting points you have observed, appreciate it for putting up. “The thing always happens that you really believe in and the belief in a thing makes it happen.” by Frank Lloyd Wright.

  2. Hello! I’ve been following your website for a long time now and finally got the courage to go ahead and give you a shout out from Houston Tx! Just wanted to say keep up the fantastic job!

Leave a Reply

Your email address will not be published.