News ٰآس پاسٰ برصغیر تازہ ترین

سست رفتار انٹرنیٹ، کشمیرہوم سیکریٹری کےخلاف سمن

سست رفتار انٹرنیٹ کی وجہ سے عدالتوں کوسماعت کے دوران ہورہی مشکلات کی وجہ سے ہائی کورٹ کی چیف جسٹس گیتا متل نے ہوم سیکریٹری جموں و کشمیر شالین کابرا کو رواں ماہ کی 16 تاریخ کو ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے عدالت میں حاضر ہونے کو کہا ہے۔ شالین کابرا سے کہا گیا ہے کہ وہ عدالت کو اس سے متعلق اقدامات کی تفصیلات پیش کریں۔
گزشتہ روز چیف جسٹس گیتا متل اور جسٹس سنجے دھر پر مشتمل بینچ نے جموں و کشمیر اور لداخ کے باشندگان کے ہنگامی مسائل کو وقت پر حل نہ کیے جانے پر تشویش کا اظہار کیا۔بینچ کا کہنا تھا کہ ‘عدالتوں میں ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے سماعت کا عمل اسی لئے لایا گیا کیونکہ مرکزی علاقے میں عالمی وبا کورونا وائرس کے معاملات میں بھی اضافہ دیکھا جا رہا ہے اور جس کے پیش نظر احتیاطی لاک ڈان بھی نافذ کیا گیا ہے۔’بینچ نے سماعت کے دوران مشکلات کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ ‘تمام کوششوں کے باوجود ہمارے تکنیکی ماہرین سماعت کے دوران ویڈیو اور آڈیو کنیکٹیوٹی میں ہورہی مشکلات کا حل نہیں نکال پا رہے ہیں۔ بینچ کا مزید کہنا تھا کہ ‘انصاف حاصل کرنا ہر کسی کا بنیادی حق ہے۔ ان حقوق پر رکاوٹ ڈالنا اچھی بات نہیں ہے۔ عدالت ہر شہری کے لیے قابل رسائی ہونی چاہیے تاہم ایسا اس وقت دکھائی نہیں دے رہا۔ عدالتوں میں درپیش مشکلات کی وجہ سے جموں و کشمیر کے ہوم سیکرٹری شالین کابرہ کو حکم دیا جاتا ہے کہ وہ رواں مہینے کی 16 تاریخ کو ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے بینچ کے سامنے پیش ہوں اور اس جانب میں اٹھائے گئے اقدامات کی تفصیلات بیان کریں’۔بینچ نے اس تعلق سے تین صفوں پر مشتمل اپنا حکم نامہ جاری کرتے ہوئے عدالت عظمی کی جانب سے مرکزی زیر انتظام جموں و کشمیر میں انٹرنیٹ پرعائد پابندی پر جائزہ لینے کے لیے ایک ہائی لیول کمیٹی تشکیل دی تھی۔قابل ذکر ہے کہ عدالت عظمی نے 11 مئی کو ہائی لیول کمیٹی تشکیل دینے کا حکم دیتے ہوئے انتظامیہ سے کہا تھا کہ وہ سست رفتار انٹرنیٹ کی وجہ سے صحافیوں، ڈاکٹرز اور وکلا کو ہورہی مشکلات کا حل کریں۔ساوتھ ایشین وائر کے مطابق اس سے قبل اپریل کے مہینے میں عدالت عالیہ نے جموں و کشمیر میں 4جی انٹرنیٹ کی بحالی کے تعلق سے انتظامیہ سے رپورٹ طلب کی تھی۔ عدالت کا کہنا تھا کہ عالمی وبا کی وجہ سے طلبا اپنے گھروں میں محدود ہیں اور ایسے میں سست رفتار انٹرنیٹ ان کی تعلیم کو متاثر کر رہا ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ برس پانچ اگست کو جب دفعہ 370 اور 35 اے کو منسوخ اور ریاست جموں و کشمیر کا درجہ گراکر دوزخ مرکزی زیر انتظام علاقوں میں تبدیل کیا گیا اس کے بعد سے ہی انٹرنیٹ خدمات پر پابندی عائد ہے۔ تاہم رواں سال جنوری کے مہینے میں جموں کشمیر میں صرف 2 جی انٹرنیٹ بحال کی گئی

1,545 total views, 0 views today

73 Replies to “سست رفتار انٹرنیٹ، کشمیرہوم سیکریٹری کےخلاف سمن

  1. Hey just wanted to give you a brief heads
    up and let you know a few of the images aren’t loading properly.

    I’m not sure why but I think its a linking issue.
    I’ve tried it in two different web browsers and both show the same results.

  2. We’re a gaggle of volunteers and opening a brand new scheme in our community.
    Your website provided us with helpful info to work on. You’ve performed
    a formidable activity and our whole group might be grateful
    to you.

  3. Hello, I think your website might be having browser compatibility issues.

    When I look at your blog in Firefox, it looks fine but when opening in Internet
    Explorer, it has some overlapping. I just wanted to give you
    a quick heads up! Other then that, excellent blog!

  4. You could certainly see your expertise in the work you write.
    The arena hopes for more passionate writers like you who are not afraid to mention how they believe.
    All the time follow your heart.

  5. Independance Immobilière – Agence Dakar Sénégal
    Av. Fadiga, Immeuble Lahad Mbacké
    BP 2975 Dakar
    +221 33 823 39 30

    Agence Immobilière Dakar

    I simply couldn’t leave your website before suggesting that
    I extremely enjoyed the standard info an individual supply in your guests?
    Is gonna be again often in order to inspect new posts

Leave a Reply

Your email address will not be published.